Syed Kashif Raza
سوشل میڈیا کی باتیں اور مکالمے

پاپولر کلچر، گلیمر کی سیمیاٹکس semiotics اور سیاست

گلیمر کی سیمیاٹکس کو پہلے انقلابیوں نے ہی استعمال کیا تھا اور لینن اور چے گویرا کی تصویریں پاپولر کلچر کا حصہ بن کر حقیقی تبدیلی کی جد و جہد میں کام آئی تھیں۔ […]

Syed Kashif Raza
خبر و تبصرہ: لب آزاد ہیں تیرے

آؤ ہم تماشا دیکھتے ہیں

آؤ ہم تماشا دیکھتے ہیں ملک کی پُر امن سیاسی جماعتوں کے ہاتھ باندھ دیے گئے۔ ملک کے سابق صدر اور سابق وزرائے اعظم کو نہ صرف نظر بند کیا گیا، بَل کہ رہائی کے […]

ایک روزن لکھاری
مطالعۂ خاص و فکر افروز

نیوزی لینڈ کو تو شاباش، لیکن ہالوکاسٹ اور ہماری عینک

نیوزی لینڈ کو تو شاباش، لیکن ہالوکاسٹ اور ہماری عینک از، سید کاشف رضا بعض چیزوں کی سمجھ اپنی عینک لگا کر دیکھنے سے نہیں آ سکتی۔ یہودی ہالوکاسٹ اور اس پر مغرب کی شرمندگی […]

خبر و تبصرہ: لب آزاد ہیں تیرے

ابو جی ، از سید کاشف رضا

ابو جی ، از سید کاشف رضا پندرہ نومبر 1948ء کو انگلستان میں جشن کا سماں تھا۔ ایک روز پہلے چودہ نومبر کو شہزادہ چارلس پیدا ہوا تھا۔ پندرہ نومبر کو ہی منڈی بہاؤالدین کے […]

ایک روزن لکھاری
مطالعۂ خاص و فکر افروز

جنوبی ایشیا میں فاشزم کا عروج

جنوبی ایشیا میں فاشزم کا عروج (سید کاشف رضا) کراچی کے ادبی میلے میں ہر مرتبہ جو پاکستانی اکٹھے ہوتے ہیں وہ پاکستان میں بڑھتی ہوئی مذہبی انتہا پسندی کے سبب غیر ملکی دوستوں کے […]

ایک روزن لکھاری
خبر و تبصرہ: لب آزاد ہیں تیرے

مالک رام سے ملاقات

مالک رام سے ملاقات (سید کاشف رضا) رمضان کے مہینے میں لوگوں کو خواب میں نورانی ہستیوں کی زیارت ہوتی ہے۔ ہمیں ابھی صبح خواب میں اردو کے نام ور محقق جناب مالک رام کی […]

ایک روزن لکھاری
ترجمے زبان و ادبِ دیگراں

ہمارے تین اسٹریٹجک اتحادی : امریکا، چین، سعودی عرب

ہمارے تین اسٹریٹجک اتحادی : امریکا، چین، سعودی عرب (سید کاشف رضا) پچھلے ستر برسوں کے دوران پاکستان کی خارجہ پالیسی میں ہمارے اسٹریٹجک اتحادی صرف تین ملک رہے ہیں: امریکا، چین اور سعودی عرب۔ […]

ایک روزن لکھاری
مطالعۂ خاص و فکر افروز

قومی خواب میں تبدیلی کا آپشن

قومی خواب میں تبدیلی کا آپشن (سید کاشف رضا) دنیا کے نقشے پر ذرا نظر دوڑائیں تو لگ بھگ دو سو ملکوں کی سرحدیں نظر آتی ہیں۔ ان میں سے کچھ ملک ترقی یافتہ ہیں […]

مطالعۂ خاص و فکر افروز

ادب میں بھی متوازی ڈسکورس کی ضرورت ہے

ادب میں بھی متوازی ڈسکورس کی ضرورت ہے (سید کاشف رضا) پولستانی ادیب چیسلاو میلوش (Czeslaw Milosz)کو سن پچاس کی دہائی کے اوائل میں اسی آمریت کا سامنا تھا جس میں مکالمہ اور ڈسکورس صرف […]