منزہ احتشام گوندل
جمالِ ادب و شہرِ فنون

تصویر

تصویر افسانہ از، منزہ احتشام گوندل آؤ، آؤ، آؤ یہاں بیٹھو، اس صوفے پر، سفید بالوں والے پینسٹھ سالہ آدمی نے اس کو نشست گاہ کی دروازے کے سامنے والی، پچھلی دیوار کے ساتھ لگے […]

منزہ احتشام گوندل
جمالِ ادب و شہرِ فنون

حبیب

حبیب افسانہ از، منزہ احتشام گوندل یہاں درمیان میں آ جاؤ۔ اس دائرے کے اندر روشنی پڑ رہی ہے۔ یہاں کھڑی ہو جاؤ۔ وہ پہلے دائرے سے نکلی اور درمیان جا کے رک گئی۔ وہاں […]

منزہ احتشام گوندل
خبر و تبصرہ: لب آزاد ہیں تیرے

استاد کی ڈائری

استاد کی ڈائری از، منزہ احتشام گوندل انسان اپنی سماجی اور معاشرتی زندگی میں بہت سے دوسرے عوامل کے ساتھ کچھ رشتوں کی کڑیاں بھی لے کر آ تا ہے۔ یہ اس کی تقدیر ہوتی […]

منزہ احتشام گوندل
جمالِ ادب و شہرِ فنون

یک بوسۂِ شیریں

یک بوسۂِ شیریں افسانہ از، منزہ احتشام گوندل چیخم دھاڑ کی آوازیں سن کر SHO محمود عباسی نے جلدی سے اپنی کرسی سے اٹھ کر باہر جھانکا۔ اور سامنے کا منظر دیکھ کر ششدر رہ […]