شیما کرمانی
مصنف اور تصنیف و تالیف: روزنِ تبصرۂِ کُتب

شیما کرمانی کی رقص کرتی باتیں

شیما کرمانی کی رقص کرتی باتیں شکور رافع ‘‘ہیلو، بھئی آ رہا ہے نا شام، انجمن ترقی پسند اسلام آباد کے اجلاس میں؟’’ ‘‘کس کا لیکچر ہے اس بار؟’’ ‘‘شیما کرمانی۔۔۔ کون ؟ ۔۔ وہ […]

خبر و تبصرہ: لب آزاد ہیں تیرے

اسلامی ممالک پر امریکی پابندی: کبڑے کو لگی لات میں شفا کے امکانات

(شکور رافع) سات اسلامی ممالک کے افراد پر انکل سام نے پابندی لگا دی۔۔۔۔ اچھا۔ اپنی مٹی اور اُس پہ دمکنے والے رنگوں سے محبت فطری اور قدرتی جذبہ ہے۔ ایک غریب شاعرکو پردیس میں […]

ایک روزن لکھاری
خبر و تبصرہ: لب آزاد ہیں تیرے

اے خدا یہ میڈیا سلامت رہے!

(شکور رافع) کاروبار معیشت ہو یا محبت، ماہ دسمبر سود و زیاں کا گوشوراہ لکھتا ہے اور ہائے کہ اکثر خسارہ لکھتا ہے۔۔۔ ماہ دسمبر میں مسافر کو اردگرد کے سب شعبوں کے ہاں خزانی […]

خبر و تبصرہ: لب آزاد ہیں تیرے

نورانی ٹوٹے

نورانی ٹوٹے از، شکور رافع  مستونگ،گڈانی اور شاہ نورانی کے کرب نے تخلیقی جوہر مار سا دیا ہے۔فنون لطیف کثیف دکھائی دیتے ہیں۔ کہانی گم سی ہو چکی۔ دل دلیلوں پہ اتر آیا ہے کہ […]