رفیع اللہ میاں
مطالعۂ خاص و فکر افروز

پر تشدد سوچ اور پر تشدد عمل

پر تشدد سوچ اور پر تشدد عمل از، رفیع اللہ میاں سوچ کے ٹکراؤ اور دہشت کے عملی اقدامات میں بہت فرق ہے۔ لوگ عام طور پر متعدل مزاج نہیں ہوتے۔ وہ سوچ میں شدت […]

ایک روزن لکھاری
جمالِ ادب و شہرِ فنون

شاعری میں ’عشرہ‘کی حقیقت

شاعری میں ’عشرہ‘کی حقیقت (رفیع اللہ میاں) جب میں کوئی مضمون لکھتا ہوں تو میرے لیے سب سے مشکل کام یہ ہوتا ہے کہ گزشتہ کا ہزار بار کا دہرایا ہوا پھر سے دہرانے بیٹھ […]

قد عارف شفیق کا : اپنےتعصبات سمیت کراچی کا نمائندہ شاعر
جمالِ ادب و شہرِ فنون

قد عارف شفیق کا : اپنےتعصبات سمیت کراچی کا نمائندہ شاعر

قد عارف شفیق کا (رفیع اللہ میاں) وہ رمضان ہی کا مہینہ تھا جب عارف شفیق سے میری پہلی ملاقات‘ کوئی پندرہ سولہ برس قبل (اندازاً) فرید پبلشر کے کتاب میلے میں ابن آس کی […]

جمالِ ادب و شہرِ فنون

’خواب دان ‘کے حوالے سے ایک تنقیدی نوٹ

(رفیع اللہ میاں) ’اختراع‘ اور ’ارتفاع‘ صرف غزلیہ مجموعے ہی نہیں‘ اختر رضا سلیمی کے فن کے اختراعی پہلو سے ارتفاعی پہلو تک کے سفر کا حوالہ بھی ہیں۔ تخلیقی سفر کے راستے کو پہچاننے […]

مصنف اور تصنیف و تالیف: روزنِ تبصرۂِ کُتب

 ناول میرواہ کی راتیں : پڑھت کی قوت اور کردار

ناول میرواہ کی راتیں : پڑھت کی قوت اور کردار از، رفیع اللہ میاں ادب میں جب ہم قاری کے تناظر کو پیش نظر رکھتے ہیں تو اس سوال کو اہمیت دی جاتی ہے کہ […]